اردو

روس | ماسکو نے ایک بار پھر کہا ہے کہ ہم نے امریکی انتخابی عمل میں مداخلت نہیں کی اور نہ ہی ہم ایسا کرنے کا ارادہ رکھتے ہیں


روسی وزارت خارجہ کی سرکاری ترجمان ماریہ زاخاروا نے اس بات کی تصدیق کی ہے کہ ان کا ملک امریکہ اور دیگر ممالک میں انتخابی عمل میں مداخلت کرنے کا ارادہ نہیں رکھتا ہے۔

آج جمعہ کو ماریہ زاخاروا نے ایک پریس کانفرنس میں واشنگٹن کی جانب سے امریکی انتخابات کو "اثر انداز" کرنے کی مبینہ کوشش کرنے کے الزام میں جمعرات کے روز تین روسی شہریوں پر پابندیاں عائد کرنے پر تبصرہ کرتے ہوئے

انہوں نے کہا ہے کہ میں ایک بار پھر امریکیوں کو یہ یاد دلانا چاہوں گی کہ روس نے امریکہ اور دوسرے ممالک میں انتخابی عمل میں نہ تو مداخلت کی ہے اور نہ ہی اس میں مداخلت اور اثر انداز ہونے کا ارادہ رکھتی ہے۔

انہوں نے مزید کہا ہے کہ ہم نے امریکیوں کو ایک سے زیادہ بار تجویز دی ہے کہ وہ تمام متعلقہ امور پر تبادلہ خیال کریں اور باہمی احترام پر مبنی بات چیت کے فریم ورک کے تحت پرسکون اور غیر سیاسی انداز میں ان کا حل تلاش کریں لیکن ان کی طرف سے اب تک کوئی جواب نہیں ملا ہے۔