اردو

فلسطین | اسماعیل رضوان: عرب لیگ اپنے اصل راستے سے ہٹ گئی ہے


ہم عرب لیگ کے اس موقف کی مذمت کرتے ہیں جس نے متحدہ عرب امارات اور صیہونی حکومت کے مابین تعلقات کو معمول پر لانے کی مذمت نہیں کی۔

انہوں نے مزید کہا ہے کہ عرب لیگ اپنے راستے سے ہٹ چکی ہے جو کہ فلسطینی کاذ کی حمایت کرنا اور صیہونی حکومت کے ساتھ تعلقات معمول پر لانے کی مذمت کرنا ہے۔

رضوان نے مزید کہا ہے کہ ہم تعلقات کو معمول پر لانے کی مخالفت کرنے والے سب سے بڑے عرب دھڑے کی تشکیل چاہتے ہیں اور ہم عرب اور اسلامی اقوام سے مطالبہ کرتے ہیں کہ وہ عملی طور پر اسرائیل سے نفرت کا اظہار کریں۔

واضح رہے کہ گذشتہ بدھ کے روز عرب ممالک نے فلسطینی منصوبے کی منظوری کو مسترد کر دیا تھا جس میں صیہونی حکومت کے ساتھ متحدہ عرب امارات کے تعلقات کو معمول پر لانے کی مذمت بھی کی گئی تھی۔